مضبوط ہڈیوں اور پٹھوں کے لیے غذائیں

Foods For Stronger Bones And Muscle.

آج کے دور میں ہڈیوں کی کمزوری ایک عام مسئلہ ہے۔ ہڈیوں کی ایک اور بیماری آسٹیو پوروسز بھی عام ہو رہی ہے۔ ان تمام بیماریوں کی وجہ ہماری گزاروں میں کم کیلشیم کی مقدار ہے۔ ان امراض میں ہڈیوں کی کثافت کم ہوجاتی ہے۔ جس کی وجہ وہ کمزوری کا شکار ہوجاتی ہیں۔ ہر دو میں سے ایک خاتون اور ہر چار میں سے ایک مرد اس کا شکار ہوتا ہے۔ اس بیماری میں ہڈیاں ٹوٹنے کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔   مگر روزمرہ کی زندگی میں چند غذاﺅں کے استعمال سے آپ کی عمر بڑھنے سے ہڈیوں میں آنے والی کمزوری سے آپ بچ سکتے ہیں۔

دہی۔

دہی ہڈیوں کے لیے ایک بہترین غذا ہے۔ کیونکہ اس میں پوٹاشیم، کیلشیئم، وٹامن ڈی، اے اور فولیٹ پایا جاتا ہے۔ یہ سب آپ کی ہڈیوں کی مضبوطی کے لیے بہترین ہیں۔ طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ جو شخص روزانہ دہی استعمال کرتا ہے اس کوڈیوں کی کمزوری کا خطرہ کم ہو جاتا ہے۔ اگر آپ کو لگتا ہے کہ ہڈیاں کمزور ہوچکی ہیں تو دہی کھانا عادت بنالیں۔

دودھ ۔

دودھ بھی ہڈیوں کی کمزوری ختم کرنے کے لیے ایک بہترین غذا ہے۔ کیونکہ دودھ میں بھی فاسفورس، وٹامنز اے، ڈی اور کیلشیئم پایا جاتا ہے۔ جو کہ آپ کی ہڈیوں کو مضبوط بنانے کے لیے فائدہ مند ہے۔ اس کے لیے فورٹیفائیڈ ملک پینا بھی فائدہ پہنچا سکتا ہے۔

خشک میوہ جات۔

خشک میوه جات جیسا کے بادام، کاجو اور مونگ پھلی وغیرہ۔ ان میں میگنیشیم اچھی مقدار میں پایا جاتا ہے۔ جو ہڈیوں کی ساخت کو بہتر بنانے میں مدد دیتا ہے، جبکہ یہ کیلشیئم جذب کرنے کے لیے بھی ضروری ہے۔

آلو بخارہ۔

آلوبخارہ ہڈیوں کو مضبوط بنانے کا ایک بہترین ذریعہ ہے۔ مگر لوگ اس کا یہ فائدہ نہیں جانتے آلوبخارہ ہڈیوں کو 20 فیصد زیادہ مضبوط بناتا ہے۔ طبی ماہرین نے یہ بھی بتایا ہے کہ خشک آلو بخارا بھی ہڈیوں کو مضبوط بنانے کے لیے بہترین ہیں اور یہ ہڈیوں کو ریڈی ایشن سے تحفظ بھی فراہم کرتے ہیں۔

مچھلی۔

ویٹامن ڈی حاصل کرنے کا ایک اور سریاب مل لیں بھی ہے۔ اگر آپ ہفتے میں ایک سے دو بار مچھلی کھاتے ہیں تو آپ کو ووٹ ڈی اچھی مقدار حاصل ہوجاتی ہے جو آپ کی ہڈیوں کے لیے بہترین ہیں۔ 

انڈے۔

انڈے کی زردی وٹامن اے، ڈی، کے اور ای فراہم کرتی ہے۔ وٹامن ڈی کیلشیئم جذب کرنے کے لیے ضروری عنصر ہے جس سے ہڈیوں کی صحت بہتر ہوتی ہے۔

“مزید پڑھیں “کولیسٹرول کو کنٹرول کرنے کے لیے کھانے

Leave a Reply

Your email address will not be published.