تمباکو نوشی کرنے والے کورونا سے متاثر

Smokers Impacted By COVID-19.

لندن میں ہونے والی تمباکو نوشی کے عادی افراد پر ایک جدید تحقیق ہوئی. جس میں تمباکو نوشی کرنے والے 24 لاکھ افراد کے طبی ریکارڈ کا جائزہ لیا گیا۔ اس تحقیق میں یہ بات سامنے آئی کے تباکو نوشی کرنے والے افراد میں کووڈ-19 ہونے کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے. تمباکو نوشی کرنے والے لوگوں میں کووڈ-19 کی علامات زیادہ پائی جاتی ہیں۔

اس تحقیق سے یہ ثابت ہوا ہے کہ ام افراد کے مقابلے میں تمباکو نوشی کرنے والوں کو کووڈ-19 علامات کی نشوونما میں 14 فیصد زیادہ خطرہ ہوتا ہے.  جب کہ ان لوگوں میں عام افراد کے مقابلے میں پانچ سے زیادہ علامات کا امکان 29 فیصد اور 10 فیصد سے زیادہ علامات کی اطلاع کا امکان 50 فیصد زیادہ تھا۔ 

تحقیق میں مزید بتایا گیا ہے کہ تمباکو نوشی نہ کرنے والوں کے مقابلے میں سگریٹ نوشی کے عادی افراد کے اسپتال میں داخل ہونے کا امکان دو گنا زیادہ ہوتا ہے اور انھیں انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں داخلے اور وینٹی لیٹر کی ضرورت پہلے پڑ سکتی ہے اور کئی افراد دوران علاج ہی دم توڑ جاتے ہیں اور جو بچ جاتے ہیں انہیں صحت یابی کے بعد بھی طویل مدت تک کھانسی، سانس لینے میں تکلیف اور آکسیجن کی معمولی قلت کا سامنا ہوسکتا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.