بارش کے موسم میں محفوظ رہیں

Stay Safe During the Rainy Season.

بارش کی بوندیں دیکھ کر ہر شخص کا دل بچہ بن جاتا ہے اور ہر فرد بارش کی جل تھل سے لطف اندوز ہونا چاہتا ہے۔ لیکن بعض دفعہ ایسا بھی ہوتا ہے کہ آپ بارش میں بھیگتے رہتے ہیں جس سے آپ کو ٹھنڈ لگ جاتی ہے اور آپ بیمار ہو جاتے ہیں۔ لیکن بارش میں بھیگنے کے بعد اگر آپ چند احتیاطی تدابیر اپنا لیں، تو آپ کئی بیماریوں سے بچ سکتے ہیں ۔

آدھے گھنٹے سے زیادہ وقت تک گیلے کپڑے نہ پہنے۔

اگر آ پ گھر میں ہی بارش میں نہار رہے ہیں تو کوشش کریں کہ آدھے گھنٹے سے زیادہ بارش میں نہ بھیگیں ۔ خاص طور پر وہ بچے جو جلد بیمار ہو جاتے ہیں انھیں جلد سے جلد خشک کر کے گرم کپڑے پہنائیں ۔ چونکہ موسم کی پہلی بارش میں آلودگی شامل ہوتی ہے۔ زیادہ دیر تک گیلے کپڑے پہنے رہنے سے پھیپھڑوں میں ٹھنڈ بیٹھ جاتی ہے لہذا تمام گیلے کپڑے (انڈر گارمنٹس اور موزے )فوری تبدیل کر لینے چاہئیں ۔

.گرم پانی سے غسل کریں

بارش چاہے مون سون کی ہو یا پھر سردی کی، آپ بارش میں نہانے کے بعد اپنے آپ کو خوش کریں اور پھر گرم پانی سے غسل کریں۔ اس سے یہ فائدہ ہوگا کہ آپ کا جسم گرم، ٹھنڈا نہیں ہوگا اور آپ بیمار نہیں پڑھیں گے۔ بارش میں نہانے کے بعد بیوٹی سوپ یا تیز خوشبو والا باڈی واش استعمال نہ کریں بلکہ اس کے بجائے اینٹی سیپٹک صابن ہی استعمال کرنا چاہئے ۔ تاکہ آپ کا جسم صاف ہو سکے۔

.گرم مشروبات استعمال کریں

بارش کے موسم میں تلی ہوئی اشیاء کا استعمال بڑھ جاتا ہے۔ جس کی وجہ سے وائرل انفیکشن (نزلہ ،کھانسی )زیادہ جلدی حملہ آور ہوتے ہیں، بارش چاہے سردیوں کی ہو یا گرمیوں کی، ،بارش میں نہانے کے بعد گرم چائے ،گرین ٹی سوپ کا استعمال کرنا چاہئے ۔ تاکہ آپ کا جسم گرم ہو جائے اور آپ بیمار نہ پڑھیں۔ ہمارے ہمسائے ملک انڈیا میں چونکہ بارشیں زیادہ ہوتی ہیں۔ اس لئے وہاں بارش میں بھیگنے کے بعد مصالحہ چائے تیار کی جاتی ہے اور اس کا استعمال مون سون میں کثرت سے کیا جاتا ہے۔ مصالحہ چائے ان کے جسموں کو گرم اور بیماریوں سے حفاظت کرتی ہے۔

زیادہ کھانے سے پرہیز کریں۔

مون سون کے دوران کھانا کھانا زیادہ ہو جاتا ہے۔ کھانا بنانے میں غیر صحت بخش صورتحال اور آلودہ پانی استعمال کرنے سے آپ کے پیٹ میں انفیکشن ، ہیپاٹائٹس اے جیسی متعدد بیماریوں کا شکار ہو سکتے ہیں ہیں۔

بارش میں گھومنے پھرنے سے بچیں۔

بارش میں چلنے کا امکان تفریح محسوس ہوسکتا ہے۔ تاہم ، بارش کے موسم کے دوران اپنائی جانے والی ایک اہم احتیاط میں ایک یہ بھی شامل ہے، کہ سڑک پر کھڑے پانی سے دور رہنا ہے ۔ پانی کے یہ تالاب صاف صاف نظر آتے ہیں، لیکن ان میں بہت سارے بیکٹیریا ہوتے ہیں ، جس کی وجہ سے متعدد وائرل بیماریوں اور فنگل انفیکشن ہوسکتے ہیں۔ ذیابیطس میں مبتلا افراد دوسروں کے مقابلے میں اس سے بھی بڑا خطرہ ہیں۔

اگر آپ کے پاس آپ کے گھر یا کام کی جگہ پر جانے کے لئے ان گڈھوں میں قدم رکھنے کے علاوہ اور کوئی چارہ نہیں ہے تو ، اپنے پیروں کو صابن اور صاف پانی سے اچھی طرح دھوئیں۔ نیز ، گیلے موزے یا گیلے جوتے نہ پہنیں کیونکہ ان میں ہر طرح کے جراثیم ہو سکتے ہیں۔

“مزید پڑھیں “دن کا آغاز پانی ، فائدہ یا نقصان

Leave a Reply

Your email address will not be published.