ذیابیطس کے مریضوں کے لیے شوگر کا متبادل

Alternative Of Sugar For Diabetics.

روٹی اور ڈبل روٹی دونوں کو بنانے میں آٹے کا استعمال ہوتا ہے۔ لیکن کیا آپ جانتے ہیں ان میں سے ہمارے لئے کون سی مفید ہے۔ آج اس ٹوپک میں آپ کو اس کے بارے میں بتاؤ گا۔ آج کل براؤں ، گرین ، جنجر بریڈ اور گالک بریڈ بھی دستیاب ہیں۔ صحت کی احتیاط برتنے والے گھرانوں میں یہ تمام بریڈز عام استعمال میں آتی ہیں اور یہاں وائٹ ڈبل روٹی کا استعمال نظر نہیں آتا۔ وائٹ ڈبل روٹی میں میدے ، شکر ، ویجی ٹیبل آئل خمیر اور روٹی ایملسفیئرس شامل کئے جاتے ہیں،چند سالوں سے پاکستان میں بننے والی380 گرام کے وزن پر مشتمل ڈبل روٹی میں وٹامنز بھی شامل کئے جا رہے ہیں، وٹامن B1,B2اور C مثلاً کیلشیم ، آئرن ، نیاسین اور فولک ایسڈ 20%اور 40%فیصد تک شامل کئے جانے لگے ہیں۔ ماہرین غذائیت کا کہنا ہے ریفائن آٹے سے تیار کی جانے والی ڈبل روٹی یا روٹی نظام ہاضمہ پر برا اثر ڈالتی ہے۔ سفید آٹے کی روٹی بھیاتنی مفید نہیں جتنی سرخ آٹے یعنی سوجی اور بھوسی نکالے بغیر یعنی بے چھنےآٹے کی روٹی مفید ہے۔

لال آٹے کی روٹی۔

لال آٹے کی روٹی میں غیر ضروری اجزاء نہیں پائے جاتے۔ یہ گندم اور صاف پانی سے آٹا گوندھ کر تیار کیا جاتا ہے۔ یہ نظام ہضم پر برے اثرات مرتب نہیں کرتا اور فٹنس برقرار رکھنے اور وزن کو اعتدال میں رکھنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے۔ ہماری روٹیوں میں بیسن ، باجرے ،جوار ، مکئی اور گیہوں کے آٹے جیسی ورائٹی بھی شامل ہے۔

سفید آٹے کے پراٹھے۔

سفید آٹے کے پراٹھے ضروری نہیں کہ اپنی غذائیت میں مفید ہوں۔ غیر صحت بخش خوراک کا استعمال آنتوں اور معدے کی بیماریوں میں مبتلا ء کر سکتاہے۔ اگر آپ اس سے بچنا چاہتے ہیں۔ بہتری یہ ہے کہ سفیدآٹے میں تھوڑی مقدار لال آٹے کی بھی شامل کرلی جائے۔ یہ نظام ہضم پر برے اثرات مرتب نہیں کرتا اور فٹنس برقرار رکھنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے۔

جنجر اورگارلک بریڈ۔

جنجر اورگارلک بریڈ اول یہ ڈبل روٹیاں قیمتاً مہنگی ہیں۔ ان ڈبل روٹیوں میں ایسے وٹامنز پائے جاتے ہیں، جو آپ کی صحت کے لیے بہت مفید ہیں۔ ان ڈبل روٹیوں کا استعمال سے نا آپ کے وزن میں اضافہ ہوتا ہے اور آپ کا نظام ہضم بھی بہتر رہتا ہے۔

نوٹ۔

جن آٹو سے بھوسی اور فائبر علیحدہ نہ ہواس کی روٹی اور ڈبل روٹی دونوں ہی صحت کیلئے بہت مفید ہے۔ آپ روٹی کا انتخاب کریں یا ڈبل روٹی کا ، اس کے ساتھ تازہ سبزیاں ، دودھ یا دودھ سے بنی غذاؤں اور تازہ پھلوں کااستعمال بھی جاری رکھیں ۔یاد رکھیں آپ اور آپ کا گھرانہ توانا ہو تو نسلوں کا تحفظ بھی یقینی ہوجاتا ہے۔

“مزید پڑھیں “ہائی بلڈ پریشر کو کم کرنے میں مددگار کھانے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.